Sale

Conceal or reveal. پردہ پوشی یا امانتداری (Urdu)

Buying Options

Frame material: Beechwood
Frame type:  Magnetic, hanging. 
Print type:  UD printing / eco solvent (washable)
Print material:
 Cotton canvas
Size:  A3

What's in the box?  
1. Wooden frame (Top and bottom, each consisting of two wooden pieces and 3 pairs of magnets for maximum strength)
2. Printed Canvas
Note: Canvas may be wiped clean or hand-washed. Gentle handwashing doesn't affect the print quality. 

Story:

 



ایک لڑکی سے برا کام ہو گیا جس کی اسے شرعی سزا مل گئی ۔ پھر اس کی قوم والے ہجرت کرکے آئے اور اس لڑکی نے توبہ کر لی اور اس کی دینی حالت اچھی ہو گئی ۔ اس لڑکی کی شادی کا پیام اس کے چچا کے پاس آیا تو اسے سمجھ نہ آیا کہ کیا کرے۔ اس کی بات بتائے بغیر شادی کرے تو یہ بھی ٹھیک نہیں کہ امانتداری کے خلاف ہے۔ اور اگر بتا دے تو یہ بھی ٹھیک نہیںکہ  ستر مسلم کے خلاف ہے۔ اس کے چچا نے یہ بات حضرت عمر بن خطاب رضی اللہ عنہ کو بتائی تو حضرت عمر رضی اللہ عنہ نے فرمایا:"بالکل نہ بتاؤ اوراس کی شادی ایسے کرو جیسے تم اپنی نیک بھلی لڑکیوں کی کرتے ہو۔"
حياة الصحابة (3/ 151)
وعند سعيد بن منصور والبيهقي عن الشعبي أن جارية فجرت فأقيم عليها الحد، ثم إنهم أقبلوا مهاجرين فتابت الجارية وحسنت توبتها، فكانت تخطب إلى عمها فيكره أن يزوجها حتى يخبر بما كان من أمرها، وجعل يكره أن يفشي ذلك عليها، فذكر أمرها لعمر بن الخطاب رضي الله عنه فقال: زوجوها كما تزوجوا صالحي فتياتكم. كذا في الكنز.

 

 

 

A woman was once punished  for a crime of immorality. However, after her tribe had arrived as immigrants in Madinah, she repented very sincerely. When she received a proposal for marriage, her uncle did not approve of getting her married without first  informing the people about her past. At the same time, he also disliked disclosing her secret.  When he consulted the caliph Omar about the matter, he said: "Get her married as you would get any of your righteous girls married." 

Sa'id b. Mansur and Bayhaqi as quoted in Kanz al'Ummal (V8. Pg.296)

 

 

Subscribe